Home O Herbal

منگل, 02 20th

Last updateپیر, 21 اکتوبر 2013 6am

بانجھ پن (عقر)

* جس عورت کو استقرار حمل نہ ہوتا ہو وہ ایام ماہواری کے فوراً بعد برادہ دندان فیل خوب باریک کیا ہوا اور مصری ہموزن سات روز تک سات ماشہ کی مقدار میں روزانہ کھائے اور اس کے بعد شوہر سے قربت کرے تو استقرار حمل کی امید کی جاسکتی ہے۔
* زیرہ سفید کو باریک کرکے تھوڑے گڑ میں ملا کر کے تین شیاف بنائیں جس عورت کو بانجھ پن ہو ایک شیاف (بتی) روزانہ رحم میں رکھے تین دن کے بعد مرد سے قربت کرے اس سے استقرار حمل کی امید کی جاتی ہے۔
* اگر بانجھ عورت سورج مکھی کے پھول کو حمول کرے تو اس کا بانجھ پن دور ہو جاتا ہے اور استقرار حمل کی امید کی جاسکتی ہے۔
* اسگند کو باریک کرکے سات ماشہ کی مقدار میں اگر کوئی عورت ابتدائے حیض سے کھائے اور غذا میں دودھ اور چاو ل ارقسم کھیر وغیرہ استعمال کرے اور حیض سے پاکی کے بعد مرد سے قربت کرے تو استقرار حمل کی امید کی جاسکتی ہے۔
* کائپھل کو باریک کرکے اس کے برابر سفید شکر ملا کرکے رکھ لیں حیض سے فارغ ہونے کے بعد روزانہ تین دن تک چھ ماشہ کی مقدار میں استعمال کرے اس کے بعد شوہر سے قربت کرے۔
* مرمکی اور نوشادر دونوں برابر وزن لے کر باریک کرکے چار چاول کے برابر گولیاں بنائیں حالت حیض ایک گولی روزانہ کھائے بعد فراغت حیض شوہر سے قربت کرے۔
* ریش برگد کا نرم و نازک حصہ لے کر سایہ میں خشک کرنے کے بعد باریک پیس لیں پھر اس کے برابر وزن مصری ملا کر رکھ لیں بعد از فراغت حیض ایک تولہ کی مقدار میں روزانہ رات کو تین دن تک کھائے پھر شوہر سے قربت کرے۔
* ناگسیر اور چھالیہ دونوں برابر وزن لے کر باریک سفوف بنالیں فراغت حیض کے بعد یہ سفوف تین ماشہ کی مقدار میں تھوڑے دودھ کے ساتھ چند روز استعمال کریں۔

BLOG COMMENTS POWERED BY DISQUS