آنکھوں کی بیماریاں

اکسیر چشم

پھٹکری بریاں 3 ماشہ، پوسست ہلہلہ، 3 ماشہ، افیون 1 ماشہ
تمام ادویہ کو باریک کرنے کے بعد آب انار دانہ 5 تولہ آب قشر لیموں 5 تولہ میں ملا کر دھیمی آنچ پر رکھیں۔ گاڑھا ہونے پر اتار لیں۔

طریقہ استعمال:
آنکھ پر لیپ کریں بعض اوقات محلول کی صورت میں بھی استعمال کرلیا جاتا ہے۔

فوائد:
آشوب چشم اور درد چشم کے لیے اکسیر ہے۔

آشوب چشم

انار دانہ ترش خشک شدہ کو لے کر پانی میں بھگو دیں اور خوب ملیں اور اس میں سے 5 تولہ پانی لے کر اس میں 3 ماشہ پھٹکڑی اور ایک ماشہ افیون حل کریں اور آگ پر پکائیں جب تمام پانی جل جائے اور گولیاں بنانے کے لیے قوام تیار ہو جائے تو کالی مرچ کے برابر گولیاں تیار کرلیں اور روزانہ شب کو ایک گولی عرق گلاب میں گِھس کر آنکھوں کے گرد لیپ کریں درد ٹیس اور سرخی کے لیے عجیب دوا ہے عموماً پہلے ہی روز ہی آرام آجاتا ہے۔

اجزائے ترکیبی:
انار دانہ 5 تولہ، عرق گلاب ایک پاﺅ پھٹکری، سفید بریاں 6 ماشہ، کافور 3 ماشہ، رسوت 3 ماشہ، افیون ایک ماشہ، نیلا توتیا 2 رتی

ترکیب استعمال:
انار دانہ کو عرق گلاب میں بگھو دیں۔ بارہ گھنٹے بھیگا رہنے کے بعد اچھی طرح مل کر چھان لیں اور چار پانچ گھنٹے پڑا رہنے دیں بعد ازں مقطر کرلیں پھر اس میں بقیہ تمام اشیاء پیس کر ملا دیں اور شیشیی میں سنھبال کر رکھیں۔

ترکیب استعمال:
ایک ایک سلائی دونوں آنکھوں میں رات سوتے وقت لگائیں۔

فوائد
آشوب چشم کو آرام آجاتا ہے۔
 انار کے پتوں کو پیس کر پانی آمیز کر کے ٹکیاں بنالیں اور انہیں آنکھوں پر باندھ لیں اس سے آشوب کو آرام ہو جائے گا۔

ھو الشافی۔ انار دانہ کو پانی میں بھگو کر رکھ دیں اور پھر اسے وقت ضرورت آشوب چشم کے مریض آنکھوں میں سلائی ڈالیں۔ ان شاءاللہ فائدہ ہوگا۔
اگر ایک ہفتہ مسلسل انار کی کلیاں یا پھول 3، 3 کی تعداد میں روازنہ نگل لیے جائیں تو سال بھر آشوب چشم کا عارضہ نہیں ہوتا۔

دھند، جالا اور خارش چشم

ترش انار کے دانوں کا پانی نکال کر بدستور سابق تانبہ کے برتن میں ڈال کر انگاروں پر رکھ کر پکائیں۔ جب گاڑھا ہوجائے تو بدستور استعمال کریں خارش کے علاوہ دھند اور جالا کے لیے بھی مفید ہے۔