کراچی… طبی ماہرین کا کہنا ہے کہ زیادہ دیر تک لپ اسٹک اور لپ گلوس لگانے سے مختلف بیماریوں میں مبتلا ہونے کا امکان بڑھ جاتا ہے۔ کیلی فورنیا یونیورسٹی میں کی گئی تحقیق کے مطابق لپ اسٹک اور لپ گلوس میں کرومیم سمیت کئی کیمیکلز کا استعمال کیا جاتا ہے۔ ایسی خواتین جو زیادہ دیر تک لپ اسٹک لگائے رہتی ہیں ان کے جسم میں ان کیمیکلز کی مقدار بڑھنے کا خطرہ زیادہ ہوتا ہے جس سے پھیپھڑوں اور پیٹ کے سرطان کا امکان بڑھ جاتا ہے۔ماہرین کہتے ہیں کہ لپ اسٹک اور لپ گلوس استعمال کرنے کے بعد ضروری ہے کہ ہونٹوں کو اچھی طرح صاف بھی کیا جائے۔