* اسارون دو ماشہ کو باریک کرکے چاول کے دھوون کے ساتھ، چیچک کے دانے نکلنے سے پہلے کھانے سے چیچک کے دانے بہت کم نکلتے ہیں۔
* مسلّم مروارید کے چھوٹے دانے دو تین عد د روزانہ کھانے سے مرض چیچک سے حفاظت رہی ہے اور اگر چیچک کے دانے نکلیں گے تو ان کی تعداد کم ہوگی۔
* سرمہ سیاہ کو تازہ دھنیا کے پانی میں خوب حل کرکے لگانے سے چیچک کی حالت میں آنکھ میں دانے اور آبلے نہیں پیدا ہوتے ہیں۔
* چیچک کی حالت میں اگر آنکھ میں آبلہ کا اثر ہو تو ہلدی کو پانی میں پیس کر آنکھ میں ڈالیں۔
* چیچک کے دانے نکل کر پیپ پڑجائے تو گل سرخ کو عنبار کی طرح خو ب باریک کرکے دانوں پر چھڑکنے سے دانے جلد خشک ہوجاتے ہیں۔
* چیچک کے مریض کو قبض کی شکایت ہو تو پوست ہلیلہ زرد ایک تولہ کو آدھ پاؤ پانی میں جوش دے کر چھان لیں اور تھوڑی مصری ملا کر پلائیں۔
* اگر چیچک کے دانے اچھی طرح نہ ابھریں تو ایک یا دو عدد انجیر کو ٹکڑے کرکے تھوڑے پانی میں پکائیں پھر چھان کر ایک رتی زعفران حل کرکے پلائیں چند بار کے پلانے سے دانے ابھرآئیں گے۔
* دانے خشک ہوکر کھرنڈ بن جائیں تو ان پر گائے کا گھی یا تیل لگائیں تاکہ داغ کم سے کم باقی رہے۔
* چیچک کی حالت میں بخار کی شدت ہو تو عناب دو دانہ خاکسی تین ماشہ کو تھوڑے پانی میں ہلکا جوش دے کر چھان لیں اور تھوڑی مصری ملا کر پلائیں۔
* چہرہ اور بدن سے چیچک کے نشانات اور دانوں کو مٹانے کی ایک موثر تدبیر یہ ہے کہ ہڈی کو جلا کر خوب باریک کرلیں اور دانوں کے مقام پر ملیں۔